ہائی سینس کے چیئرمین کا سی ای ایس اجلاس سے کلیدی خطاب

لاس ویگاس، 11 جنوری/پی آرنیوزوائر-ایشیانیٹ/

8 جنوری کو ہائی سینس گروپ کے چیئرمین چو ہوجیان نے لاس ویگاس میں کنزیومر الیکٹرونکس شو میں “ساختہ چین سے تخلیق چین تک کا سفر – ابھرتی ہوئی مارکیٹوں میں ٹیکنالوجیز” کے عنوان سے کلیدی خطاب کیا۔ یہ پہلا موقع ہے کہ 43 سال سے منعقد ہونے والے سی ای ایس میں کلیدی خطاب کے لیے کسی چینی کاروباری شخصیت کو مدعو کیا گیا ہو۔ یہ دعوت اس امر کو ظاہر کرتی ہے کہ چین کی گھریلو مصنوعات اور صارفی الیکٹرونکس کاروباری ادارے، جن کی نمائندگی ہائی سینس نے کی،  عالمی صارفی برقی صنعت میں مرکزی دھارے میں شامل ہو چکے ہیں ۔

(تصویر: http://www.newscom.com/cgi-bin/prnh/20100108/LA35099)

چو ہوجیان نے ابھرتی ہوئی مارکیٹوں میں صارفی برقی صنعت کی تیز تر ترقی اور چین کو مثال رکھتے ہوئے اقتصادی ترقی پر اس کے مثبت اثرات پر اپنی گہری نظر پیش کی۔ انہوں نے عالمی صارفی برقی مارکیٹ میں ایک ابھرتے ہوئے ستارے کی حیثیت سے ہائی سینس میں اپنے تجربات شیئر کیے اور تصور پیش کیا کہ انٹرنیٹ کے اس عہد میں ملٹی میڈیا ٹیکنالوجیز اور ماحول دوست سائنس کس طرح انسانوں کا معیار زندگی بہتر بنائے گی۔ شرکاء نے ان کی تقریر پر بھرپور جوش و خروش کا مظاہرہ کیا۔

چینی معیشت کے ظہور کے ساتھ اُن اہم مواقع کا بھرپور فائدہ اٹھایا جو فلیٹ-پینل ٹی ویز، عام ایل سی ڈی ٹی ویز کے مقابلے میں ایل ای ڈی ٹی ویز کی مقبولیت اور ٹرپل-پلے سروسز کے ارتقاء کے نتیجے میں ملے۔ آزادانہ اختراع کو بہتر بنانے اور اپنی آر اینڈ ڈی صلاحیتوں کو بہتر بنانے کے لیے ذریعے ادارے نے ہائی-اینڈ شعبوں میں کامیابی سے اپنا دائرہ وسیع کیا۔ مزید برآں ادارے نے اپ اسٹریم اور ڈاؤن اسٹریم تکمیلیت کے ذریعے اپنی مرکزی مسابقیت  کو بہتر بنایا۔ فریق ثالث کا جاری کردہ مستند ڈیٹا ظاہر کرتا ہے کہ ہائی سینس برانڈ مسلسل سات سالوں سے چین کی فلیٹ-پینل ٹی وی مارکیٹ میں سب سے زیادہ حصہ رکھتا ہے اور اس طرح ہائی سینس دنیا کے پانچ بڑے ٹی وی ساز اداروں میں سے ایک بنتا ہے، اور پہلی مرتبہ کوئی چینی ادارہ اس اعزاز کا حامل ہوا ہے۔ مستقل کوششوں کے حصے کے طور پر ہائی سینس نے نئی، ماحول دوست اور توانائی بچانے والی ٹیکنالوجیز کی تیاری میں سب سے آگے جا رہا ہے۔

انٹرنیٹ اور ملٹی میڈیا ٹیکنالوجیز کی تکمیلیت کا حوالہ دیتے ہوئے چو ہوجیان نے توجہ دلائی کہ ٹی وی بہت تیزی سے پروگرامز کے روایتی ٹیلی مواصلاتی ذریعہ سے ایک انٹرایکٹو ٹرمینل میں تبدیل ہوتے جا رہے ہیں۔ اس ارتقاء کا فائدہ اٹھانے کے لیے، ہائی سینس نے ایک انٹرفیس-دوست انٹرنیٹ ٹی وی تیار کیا ہے۔ اِس وقت ہائی سینس کی تمام ٹی وی مصنوعات نیٹ ورک انٹرفیسز اور بلٹ-اِن ایچ ڈی پلے بیک کی خصوصیات کے حامل ہیں۔ ادارہ ایک طاقتور بلٹ-اِن آپریٹنگ سسٹم، ٹی وی او/ایس، بھی تیار کر رہا ہے تاکہ نئی تفریحی و ویلیو-ایڈڈ خدمات کی وسیع ورائٹی کو براہ راست ٹی وی پر ممکن بنایا جا سکے اور گھریلو صارفین اور صارفین کو ایک تفریحی اور اطلاعاتی مواد رسدی زنجیر فراہم کی جا سکے۔

چو ہوجیان نے صارفی برقی صنعت کے مستقبل پر بھی اپنے اعتماد کا اظہار کیا۔ انہوں نے کہا کہ چینی حکومت سائنس اور تعلیم کے ذریعے چین کو قوی تر بنانے کی حکمت عملی پر جارحانہ انداز میں عمل کر رہی ہے، جو چینی اداروں کو دلیرانہ اختراعات اور اپنی مصنوعات کو “ساختہ چین” کے بجائے “تخلیق چین” کی حیثیت سے ترقی دینے پر رہنمائی کر رہی ہے۔ چین میں ایسے کئی معروف ادارے ہیں جو اگلے 15 سے 20 سالوں میں سرفہرست عالمی برانڈز بنیں گے۔ مزید برآں چینی کاروباری مالکان صنعتوں اور شعبہ جات میں رہنماؤں کی حیثیت اختیار کریں گے۔

کلیدی خطاب پر تبصرہ کرتے ہوئے کنزیومر الیکٹرانکس ایسوسی ایشن (CEA) کے صدر اور سی ای او گیری شاپیرو نے کہا کہ “چین میں ایک رہنما ادارے کی حیثیت سے، ہائی سینس بین الاقوامی مارکیٹوں میں اپنی قائدانہ پوزیشن پر مستقل ترقی کی منازل طے کر رہا ہے۔ جناب چو کی شمولیت نے سی ای ایس کے کلیدی خطیبوں کی فہرست میں اضافہ کیا۔ مصنوعات کے مظاہروں اور کاروباری تبادلہ خیال کے لیے ایک معیاری ترین مقام کی حیثیت سے سی ای ایس کو تمام کاروباروں کی جانب سے تسلیم کیا گیا ہے۔ ہم انتہائی مسرور ہیں کہ کثیر القومی ادارے، جیسا کہ ہائی سینس، سی ای ایس کی کلیدی خطیبوں کی ٹیم میں شمولیت اختیار کرسکتے ہیں اور دنیا کو اپنے عالمی وژن اور جدید خیالات سے آگاہ کریں۔”

رابطہ: جیسی ما/ برینڈا لیو

ٹیلی فون: +86 532 8087 8539 / 8933

mayuanyuan@hisense.com / Brenda@hisense.com

ذریعہ: ہائی سینس گروپ

 

Check Also

‫ٹرینا سولر کا پاکستان میں مقامی مارکیٹ لیڈرز کے اشتراک سے قابل تجدید توانائی کیلئے پائنئیرایڈوانسڈ سولر سلوشن پیش کرنے کا اعلان۔

لاہور، پاکستان، ۲۰ مئی ۲۰۲۴ْ۔۔۔ پی آر نیوز وائر/۔۔  ٹرینا سولر، اسمار ٹ پی وی …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *